0

ٹک ٹاک نے اپنے پاکستانی صارفین کے لئے اردو میں تازہ ترین  کمیونٹی گائیڈ لائنز جاری کر دیں

ٹک ٹاک نے اپنے پاکستانی صارفین کے لئے اردو میں تازہ ترین  کمیونٹی گائیڈ …

کراچی ( ویب ڈیسک)  مختصر دورانیے کی ویڈیوز کا ممتاز عالمی پلیٹ فارم ٹک ٹاک (TikTok) بتدریج پاکستان میں مقبول ہوتا جا رہا ہے جس کی وجہ تفریح اور تخلیقی اظہار کے لیے جگہ کی فراہمی ہے۔ اِس کے استعمال کرنے والے جہاں ٹک ٹاک پر کنٹنٹ تخلیق کرتے ہیں وہیں اِس پر یہ ذمہ داری بھی عائد ہوتی ہے کہ وہ  استعمال کرنے والوں کو محفوظ پلیٹ فارم مہیا کرے۔ اپنی ذمہ داری پورا کرنے کی غرض سے ٹک ٹاک نے، اردو زبان میں بھی، تازہ ترین کمیونٹی گائیڈلائنز جاری کی ہیں جو پاکستان میں ٹک ٹاک استعمال کرنے والوں کو مددگار ثابت ہوں گی اور خوش آئند ماحول برقرار رکھنے میں  معاون ہوں گی۔

یہ کمیونٹی گائیڈ لائنز، استعمال کرنے والوں کو، عمومی راہنمائی فراہم کرتی ہیں کہ اِس پلیٹ فارم پر کس قسم کی ویڈیوز کی اجازت ہے اور کس قسم کی ویڈیوز کی اجازت نہیں ہے تاکہ ٹک ٹاک کو تخلیقی صلاحیت کے اظہار اور تفریح کے لیے محفوظ بنایا جا سکے اور اْن پر مقامی قوانین اور روایات کے مطابق عمل کیا جا سکے۔ ٹک ٹاک کی ٹیموں نے ایسا کنٹنٹ ہٹا دیا ہے جو کمیونٹی گائیڈ لائنز کے خلاف تھا اور ایسے اکاؤنٹس کو معطل یا بند کر دیا ہے جو شدید یا مسلسل خلاف ورزی کے مرتکب ہو رہے تھے۔

کنٹنٹ ماڈریشن (Content moderation)  پالیسیوں، ٹیکنالوجیز اور ماڈریشن اسٹریٹیجز(strategies moderation)  کے اشتراک سے کی جاتی ہے تاکہ مسائل پیدا کرنے والے کنٹنٹ اور اکاؤنٹس کی نشاندہی کی جاسکے،اْن کا جائزہ لیا جا سکے اور مناسب سزائیں دی جاسکیں۔

ٹیکنالوجی کے شعبے میں ٹک ٹاک کے سسٹم خود کار طریقے سے کنٹنٹ کی مخصوص اقسام کی نشاندہی کرتے ہیں جو ممکن طور پر کمیونٹی گائیڈ لائنز کے خلاف ہوں اور اس طرح فوری طور پر ایکشن لینے کے قابل بناتے ہیں تاکہ ممکن نقصان کو کم کیا جا سکے۔یہ سسٹم ایسی چیزوں پر توجہ دیتے ہیں جن کا ایک مخصوص پیٹرن ہو یا ان میں رویوں سے متعلق سگنل موجود ہو تاکہ ممکن طور پر خلاف ورزی کرنے والے کنٹنٹ کی نشاندہی کی جا سکے۔

کنٹنٹ ماڈریشن کے حوالے سے آج کی ٹیکنالوجی اس قدر جدید نہیں ہے کہ کوئی بھی پلیٹ فارم، اپنی پالیسیوں کے نفاذ کے لیے،صرف اْس پر انحصار کر سکے۔مثال کے طور پر، اس بات کا تعین کرنے کے لیے کہ کوئی کنٹنٹ، مثلاً مزاح، گائیڈ لائنز کے خلاف تو نہیں، اُس کا سیاق و سباق اہم ہوتا ہے۔لہٰذا،

ٹک ٹاک کے پاس تربیت یافتہ ماڈریٹرز کی ٹیم موجود ہے جو کنٹنٹ کا جائزہ لینے اور اْسے ہٹانے میں مدد فراہم کرتی ہے۔ بعض معاملات میں، یہ ٹیم تیاری کے مراحل میں موجود کنٹنٹ یا خلاف ورزی کا انداز رکھنے والے کنٹنٹ، مثلاً خطرناک چیلنجز یا نقصان دہ غلط اطلاعات،کو ہٹا دیتی ہے۔ماڈریشن کے لیے ٹک ٹاک کی ٹیم ایک اور طریقہ بھی استعمال کرتی ہے جس میں اس کے استعمال کرنے والوں کی جانب سے موصول ہونے رپورٹیں استعمال کرتی ہے۔اس کے لیے ایپ کے اندر ہی ایک سادہ  رپورٹنگ فیچر موجود ہے جس کے ذریعے ٹک ٹاک استعمال کرنے والے ممکن طور پر غیر مناسب کنٹنٹ یا اکاؤنٹ  کے بارے میں ٹک ٹاک کو رپورٹ کر سکتے  ہیں۔

اپنی حالیہ ٹرانسپیرنسی رپورٹ (شفافیت کی رپورٹ) میں ٹک ٹاک ایسی ویڈیوز کے عالمی حجم کا تذکرہ بھی کیا ہے جنہیں اس کی کمیونٹی

گائیڈ لائنز یا ٹرمز آف سروس کی خلاف ورزی پر ہٹایا جا چکا ہے۔ اس رپورٹ کے مطابق، پاکستان ان پانچ مارکیٹوں میں شامل ہے جہاں بہت بڑی تعداد میں ویڈیوز ہٹائی گئی ہیں۔اس سے ٹک  ٹاک کے عزم کا اظہار ہوتا ہے کہ وہ پاکستان میں رپورٹ کیے گئے،کسی بھی، ممکنہ طور پر، نقصان دہ یا  غیر مناسب کنٹنٹ کو ہٹانے کا پابند ہے۔

میڈیا سوالات کے ل::

ٹکٹاک

pr@tiktok.com

نحو مواصلات

فیصل مشتاق: 0321-2431568

شیراز محی الدین: 0333-2235774

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں