Home » بلوچستان اورآزادکشمیر:موسم سرماکی پہلی بارش اوربرفباری

بلوچستان اورآزادکشمیر:موسم سرماکی پہلی بارش اوربرفباری

by ONENEWS

بلوچستان: پکنک پوائنٹس پرپابندی کی سفارش

بلوچستان کے مختلف علاقوں میں بارش کا سلسلہ جاری ہے، جب کہ حکام نے پکنک پوائنٹس پر دفعہ 144 نافذ کرنے کی سفارش کردی۔ دوسری جانب آزاد کشميرميں طويل خشک موسم کے بعد بارش اور برف باری شروع ہوتے ہی موسم مزید سرد ہوگیا۔

بلوچستان سے نمائندہ سما کے مطابق بارش برسانے والا سسٹم 13 نومبر سے افغانستان کے راستے بلوچستان میں داخل ہوا، جس کے بعد کوئٹہ سمیت بلوچستان کے بیشتر اضلاع میں موسم سرما کی پہلی بارش وقفے وقفے سے جاری ہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق آئندہ 24 گھنٹوں تک شمال مغربی بلوچستان میں بارش، جب کہ پہاڑوں پر برفباری متوقع ہے۔ محکمہ موسمیات کے مطابق شیرانی، ژوب، کوئٹہ، پشین، قلعہ سیف اللہ، قلعہ عبداللہ ، مستونگ، نوشکی، اور زیارت میں برف باری متوقع ہے۔

ادارے کے مطابق پہاڑوں پر برفباری کا بھی امکان ہے۔ بارش کے ساتھ ہی کوئٹہ و گردونواح میں سردی کی شدت میں اضافہ ہوگیا۔ محکمہ موسمیات کے مطابق کوئٹہ میں ہفتہ کی صبح درجہ حرارت 2 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔ گوادر میں کم سے کم درجہ حرارت 14، قلات میں منفی 2 ، تربت اور جیوبی میں درجہ حرارت 16، سبی 12، نوکنڈی میں 14 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا۔

کوئٹہ میں ہفتہ 14 نومبر کو ہوا میں نمی کا تناسب 36 فیصد، گوادر میں 40، قلات 36، تربت 08، جیونی 52، سبی میں 31 ، نوکنڈی میں 09فیصد ریکاڈ کیا گیا۔ چمن سمیت شمالی بلوچستان کے مختلف علاقوں میں بارش کا سلسلہ جاری ہے جس کی وجہ سے سردی کی شدت میں بھی اضافہ ہوا ہے۔ چمن شہر میں بارش کا پانی سڑکوں پر جمع ہونے سے شہریوں کو سخت مشکلات کا سامنا ہے۔

پی ڈی ایم الرٹ

محکمہ پی ڈی ایم اے نے تمام متعلقہ ڈپٹی کمشنرز کو ہائی الرٹ جاری کر دیا ہے اور تمام پکنک پوائنٹس پر دفعہ 144نافذ کرنے کی سفارش کردی ہے۔ ڈائریکٹر پی ڈی ایم اے فیصل نسیم پانیزئی کے مطابق بارشوں سے ممکنہ طور پر متاثر ہونے والے علاقوں میں ہیوی مشینری منتقل کر دی گئی ہے۔

ہیوی مشینری میں ڈوزر، ٹریکٹر، ایمبولینسز اور دیگر مشینیں شامل ہے، تاکہ کسی بھی ناخوشگوار واقع سے بروقت نمٹا جا سکے۔

فائل فوٹو

کراچی

دوسری جانب کراچی میں بھی رات کے اوقات میں سرد کی شدت میں اضافہ ہوا ہے۔ ہفتہ کی صبح کراچی میں ہلکی دھند چھائی رہی۔

لاہور

پنجاب کے دیگر شہروں کی طرح لاہور میں بھی اسموگ کا سلسلہ جاری ہے جس سے شہریوں کو شدید دشواری کا سامنا ہے۔ لاہور میں 2 ماہ سے بارش نہ ہونے کے باعث اسموگ کا مسئلہ مزید شدت اختیار کر گیا ہے۔ شہریوں کو نزلہ ،زکام اور آنکھوں میں چبھن جیسے مسائل کا سامنا ہے۔ جس سے موٹر سائیکل سوار زیادہ متاثر ہو رہے ہیں۔ لوگوں کو سانس لینا میں بھی دشوار کا سامنا ہے۔ فضائی آلودگی پر قابو پانے کیلئے حکومت نے مختلف اقدامات تو کیے ہیں مگر ماہرین کے مطابق اسموگ کی موجودہ لہر کا خاتمہ بارش سے ہی ممکن ہوگا۔

آزاد کشمیر

آزاد کشميرميں طويل خشک موسم کے بعد بارش کاسلسلہ شروع ہوگيا، جب کہ پہاڑوں پر برفباری سے موسم مزيد سرد ہوگيا۔ وادی نیلم اور وادی لیپہ سمیت ديگر علاقوں ميں بارش کا سلسلہ 13 نومبر کی شام سے شروع ہوا، جو قفر وقفے سے جاری ہے۔

ناران

ناران اور گرد و نواح میں موسم سرما کی پہلی برفباری سے موسم مزيد سرد ہوگيا ہے۔ بالائی علاقوں میں 13 نومبر کی رات سے بارش اور برفباری کا سلسلہ وقفے وقفے سے جاری ہے۔

محکمہ موسمیات

محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ بارش اور برف باری کے بعد شمالی علاقوں میں سردی کی شدت میں اضافہ ہوگا اور حرارت منفی ڈگری تک گر جائے گا۔

You may also like

Leave a Comment